> <

صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی۔ اختر حسین جعفری

اختر حسین جعفری اردو کی جدید نظم کے ممتاز شاعر اختر حسین جعفری 15 اگست 1932ء کوموضع بی بی پنڈوری ضلع ہوشیار پور میں پیدا ہوئے تھے۔ ان کے شعری مجموعوں میں آئینہ خانہ اور جہاں دریا اترتا ہے کے نام شامل ہیں۔ وہ اردو کے جدید نظم نگاروں میں ایک اہم مقام کے حامل ہیں۔ حکومت پاکستان نے ان کی ادبی خدمات کے اعتراف کے طور پر انہیں14 اگست 2002ء کو صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی عطا کیا تھا اس کے علاوہ انہوں نے اپنی تصنیف آئینہ خانہ پر آدم جی ادبی انعام بھی حاصل کیا تھا۔ اختر حسین جعفری 3 جون 1992ء کو لاہور میں وفات پاگئے اور شادمان کے قبرستان میں آسودہ خاک ہوئے۔  

UP