> <

صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی۔ محسن احسان

 محسن احسان اردو کے مشہور شاعر محسن احسان کا اصل نام احسان الٰہی تھا اور وہ 15 اکتوبر 1932ء کو پشاور میں پیدا ہوئے تھے۔ انہوں نے انگریزی ادب میں ماسٹرز کیا تھا اور 35 سال تک اسلامیہ کالج، پشاور میں انگریزی کی تدریس سے وابستہ رہے تھے۔ محسن احسان کی نظموں اور غزلوں کے مجموعے ناتمام، ناگزیر، ناشنیدہ، نارسیدہ اور سخن سخن مہتاب، نعتیہ شاعری کا مجموعہ اجمل و اکمل، قومی نظموں کا مجموعہ مٹی کی مہکار اور بچوں کی شاعری کا مجموعہ پھول پھول چہرے کے نام سے اشاعت پذیر ہوئے تھے۔ اس کے علاوہ انہوں نے خوشحال خان خٹک اور رحمن بابا کی شاعری کو بھی اردو میں منتقل کیا تھا۔ حکومت پاکستان نے ان کی خدمات کے اعتراف کے طور پر انہیں14 اگست 1999 کو صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی عطا کیا تھا۔ محسن احسان 23 ستمبر 2010ء کو برطانیہ کے شہر لندن میں وفات پاگئے۔وہ پشاور میں پشاور یونیورسٹی کے قبرستان میں آسودہ خاک ہیں۔

UP