استاد بندو خان کی وفات

استاد بندو خان ٭13 جنوری 1955ء کو کراچی میں مشہور موسیقار اور سارنگی نواز استاد بندو خان نے وفات پائی۔ استاد بندو خان 1880ء میں دہلی میں پیدا ہوئے تھے۔ ان کے والد علی جان خان بھی سارنگی بجاتے تھے اور استاد ممّن خان، جنہوں نے سر ساگر ایجاد کیا ان کے ماموں تھے۔ استاد بندو خان نے سالہا سال اپنے ماموں سے سارنگی کے اسرار و رموز سیکھے پھر وہ ایک ملنگ میاں احمد شاہ کے شاگرد ہوئے جنہوں نے انتہائی شفقت اور محبت سے بندو خان کو اپنے علم کا سمندر منتقل کردیا۔قیام پاکستان کے بعد بندو خان پاکستان چلے آئے اور ریڈیو پاکستان سے وابستہ ہوگئے۔ ایک مختصر سی علالت کے بعد 13 جنوری 1955ء کو ان کا انتقال ہوگیا۔ وہ کراچی میں آسودہ خاک ہوئے۔ استاد بندو خان کو ان کی وفات کے بعد 1959ء میں صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی سے نوازا گیا۔  

UP