> <

صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی۔ وسیم اکرم

وسیم اکرم پاکستان کر کٹ ٹیم کے سابق فاسٹ باؤلر اور کپتان وسیم اکرم 3 جون 1966ء کو لاہور پیدا ہوئے تھے۔ انھوں نے کرکٹ کا آغاز اسلامیہ کالج لاہو ر سے کیا۔ وسیم اکرم نے 86۔1985ء میں نیوزی لینڈ کے خلاف اپنے ٹیسٹ کیرئیر کی شروعات کی اور مجموعی طور پر 104ٹیسٹ اور 356 ون ڈے میچوں میں پاکستان کی نمائندگی کی ۔ 1992ء میں پاکستان کو ورلڈ کپ جتوانے میں وسیم اکرم نے اہم کردار ادا کیا تھا اور وہ انگلینڈ کے خلاف فائنل میں مین آف دی میچ قرارپائے تھے۔ سوئنگ کے بادشاہ وسیم اکرم کو ون ڈے کرکٹ میں پانچ سووکٹیں لینے والے پہلے بائولر کا اعزاز بھی حاصل ہے۔ اپنے انیس برس کے کیریئر میں وسیم اکرم نے کرکٹ کے بین الاقوامی ایک روزہ میچوںمیں 3717 اور ٹیسٹ میں 2898 زنز بنائے۔ انھوں نے چار بار ہیٹ ٹرک کی جبکہ پچیس ٹیسٹ میچوں اور 6 بین الاقوامی ایک روزہ میچوںمیں پانچ پانچ کھلاڑیوں کوشکارکیا۔ 2003ء میں کرکٹ کو الودع کہنے کے بعد وسیم اکرم نے کمینٹری شروع کی۔ 2009ء میں وسیم اکرم کو آئی سی سی ہال آف فیم میں بھی شامل کیا گیا۔ حکومت پاکستان نے انہیں 14 اگست 1992ء کو صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی عطا کیا تھا ۔  

UP