> <

صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی۔ مستنصر حسین تارڑ

مستنصر حسین تارڑ اردو کے نامور ادیب ، کالم نگار، ٹی وی میزبا ن، اداکار اور منفرد سفرناموں کے خالق مستنصر حسین تارڑ یکم مارچ 1939ء کو لاہور میں پیدا ہوئے تھے۔ 1959ء میں ان کا پہلا سفرنامہ ’’لندن سے ماسکو تک‘‘ ہفت روزہ ’’قندیل‘‘ میں قسط وار شائع ہوا۔ 1971 ء میں کتابی شکل میں ان کا پہلا سفر نامہ ’’نکلے تری تلاش میں‘‘ منظر عام پر آیا جو جدید سفر نامہ نگاری کے ایک نئے انداز کا نقطہ آغاز ثابت ہوا۔ مستنصر حسین تارڑ نے کئی ناول بھی تحریر کیے جو پڑھنے والوں میں بے حد مقبول ہوئے۔ا ب تک ان کے تیس سے زیادہ ناول اور ایک درجن سے زیادہ سفر نامے شائع ہو چکے ہیں۔ مستنصر حسین تارڑ کے سفرنامے اور ناول دنیا کی کئی زبانوں میں منتقل بھی ہوچکے ہیں۔ مستنصر حسین تارڑ ٹیلی وژن کے ایک مقبول میزبان اور اداکار بھی ہیں اور ان کی شخصیت کی یہ جہت بھی انہیں ایک منفرد مقام عطا کرتی ہے۔  مستنصر حسین تارڑ کو متعدد انعامات اور اعزازات سے بھی نوازا جا چکا ہے جن میں 14 اگست 1992ء کو عطا کیا جانے والا صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی، پی ٹی وی ایوارڈ اور لائف ٹائم اچیومنٹ ایوارڈ سر فہرست ہیں۔

UP