> <

صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی۔ جاوید میاں داد

جاوید میاں داد دنیائے کرکٹ کے ؑعظیم کھلاڑی  جاوید میاں داد12 جون 1957ء کو پیدا ہوئے۔ جاویدمیانداد کے ٹیسٹ کیریئر کا آغاز 9 اکتوبر 1976ء کو لاہور کے قذافی اسٹیڈیم میں پاکستان اورنیوزی لینڈ کے خلاف کھیلے جانے والے ٹیسٹ میچ سے ہوا۔ انہوں نے اپنے پہلے ٹیسٹ میچ میں سنچری اسکور کی۔ وہ نہ صرف یہ کہ خالد عباد اللہ کے بعد دوسرے پاکستانی تھے جنہیں یہ اعزاز حاصل ہوا بلکہ پہلے ہی ٹیسٹ میچ میں سنچری بنانے والے دنیا کے سب سے کم عمر کھلاڑی بھی تھے۔ دوسرے ٹیسٹ میچ میں انہوں نے 25 رنز اسکور کیے جبکہ تیسرے ٹیسٹ میچ میں جو کراچی میں کھیلا گیا انہوں نے پہلی اننگز میں ڈبل سنچری اور دوسری اننگ میں 85 رنز بنانے کا اعزاز حاصل کیا۔ وہ ڈبل سنچری بنانے والے دنیا کے سب سے کم عمر کھلاڑی تھے۔ جاویدمیانداد نے اپنی اس اولین ٹیسٹ سیریز میں 126 کی اوسط سے 504 رنز بنائے جو ایک قومی ریکارڈ تھا۔ اس کے بعد جاویدمیانداد نے پیچھے مڑ کر نہیں دیکھا۔ انہوں نے 124 ٹیسٹ میچ کھیلے، 189 اننگز میں بیٹنگ کی، 21 مرتبہ ناٹ آئوٹ رہے، 23 سنچریاں بنائیں اور 52.57 کی اوسط سے مجموعی طور پر 8832 رنز اسکور کیے۔ وہ دنیا کے واحد کھلاڑی تھے جن کا اوسط کبھی 50 رنز سے کم نہیں رہا۔ انہوں نے 17 وکٹیں بھی حاصل کیں اور 34 ٹیسٹ میچوں میں پاکستان کی قیادت بھی کی جن میں سے 14 میچ جیتے، 6 ہارے جبکہ 14میچ ہار جیت کے فیصلے کے بغیر ختم ہوئے۔ جاوید میاں داد نے اپنے ایک روزہ بین الاقوامی کرکٹ کیریئر کا آغاز 11 جون 1975ء کوبرمنگھم میں ایجبسٹن کے میدان میں ویسٹ انڈیز کے خلاف پہلے عالمی کپ کے ایک‘ ایک روزہ بین الاقوامی میچ میں کیا تھا۔ اس میچ میں وہ چھٹی پوزیشن پر کھیلنے کے لیے گئے اور 24 رنز بنا کر رن آئوٹ ہوگئے۔ جاوید میاں داد دنیا کے ان معدودے چند کھلاڑیوں میں سے ایک تھے جنہوں نے کوئی ٹیسٹ میچ کھیلے بغیر کرکٹ کے عالمی کپ میں اپنے ملک کی نمائندگی کا اعزاز حاصل کیا تھا۔ جاوید میاں داد نے اس کے بعد 1996ء تک منعقد ہونے والے تمام عالمی کپ مقابلوں میں پاکستان کی نمائندگی کی اور یوں 6 عالمی کپ مقابلوں میں مجموعی طور پر 33 میچ کھیلنے کا اعزاز حاصل کیا اور مجموعی طور پر 1083 رنز اسکور کیے جن میں ایک سنچری اور 8نصف سنچریاں شامل تھیں۔ اس کے علاوہ انہوں نے عالمی کپ مقابلوں میں مجموعی طور پر 22 اوور بھی کروائے ان 22 اووروں میں سے جن میں سے دو اوور میڈن تھے‘ انہوں نے 73 رنز دے کر 4 وکٹیں حاصل کرنے کا اعزاز بھی حاصل کیا۔ جاوید میاں داد نے مجموعی طور پر 233 ایک روزہ بین الاقوامی میچ کھیلے اور 8 سنچریوں اور 50 نصف سنچریوں کی مدد سے381 7رنز اسکورکئے۔ ان کا فی اننگز اوسط 41.70 زنررہا۔ انہوں نے اپنے فرسٹ کلاس کیریئر میں 402 میچز میں 80 سنچریوں اور 139 نصف سنچریاں کی مدد سے 28647 رنز اسکور کئے اور ان کا اوسط 53 رنز فی اننگز رہا۔ جاوید میاں داد کی خودنوشت سوانح عمری Cutting Edge کے نام سے اشاعت پذیر ہوچکی ہے۔ حکومت پاکستان نے انھیں 14اگست 1986ء کو صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی عطا کیا تھا۔

UP