> <

صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی۔ سمندر خاں سمندر

سمندر خاں سمندر پشتو کے بزرگ ادیب، شاعر، محقق اور مترجم سمندر خاں سمندر یکم جنوری 1901ء کو بدرشی، نوشہرہ کینٹ میں پیدا ہوئے تھے۔ ان کی تصانیف میں ژور سمندر، دادب منارہ، میرمنے، دبلال ہانگ، کاروان روان دے، لیت ولار ، خوگہ شپیلئی، پختنے، قافیہ، دایلم سوکہ، دقرآن ژڑا اور بلے ڈیوے شامل ہیں۔ اس کے علاوہ انہوں نے علامہ اقبال کی مثنوی اسرار خودی اور رموز بے خودی کا بھی منظوم پشتو ترجمہ کیا تھا جو اشاعت پذیر ہوچکا ہے۔ سمندر خاں سمندر کو حکومت پاکستان نے تمغہ امتیاز اور بعد ازاں 14 اگست 1984ء کو صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی عطا کیا تھا۔ سمندر خاں سمندرکا انتقال 17 جنوری 1990ء کوپشاور میں ہوا۔وہ بدرشی، نوشہرہ کینٹ میں آسودۂ خاک ہیں۔

UP