> <

موٹروے کے افتتاح کے موقع پر ڈاک ٹکٹ اور سووینئیر شیٹ کا اجرأ

پاکستان کے ڈاک ٹکٹ 26 نومبر 1997ء کو پاکستان کے وزیراعظم میاں محمد نواز شریف نے پاکستان موٹر وے کا افتتاح کیا۔ اس موٹر وے کی تعمیر کے لئے پاکستان نے کوریا کی فرم ڈائیوو کارپوریشن سے 7 جنوری 1992ء کو ایک معاہدہ کیا تھا جس کے بعد 11 جنوری 1992ء میاں محمد نواز شریف نے ملک کی پہلی ٹرانس پاکستان موٹر وے کی تعمیر کا افتتاح کیا۔ وزیراعظم نے اس منصوبے کو ٹرانس پاکستان موٹر وے کا نام دیا۔ ابتدائی معاہدے کے مطابق اس شاہراہ کو اپریل 1995ء تک مکمل ہوجانا تھا مگر 1993ء میں میاں نواز شریف کی حکومت کے خاتمے کے بعد اس موٹر وے کی تعمیر کا کام التوأ میں پڑ گیا۔ 1997ء میں جب میاں نواز شریف دوبارہ وزیراعظم بنے تو انہوں نے سب سے پہلے اس موٹر وے کی تعمیر پر توجہ دی اور چند ماہ میں اس کی تعمیر مکمل کرواکے اس کا افتتاح بھی کردیا۔موٹر وے کے اس پہلے حصے کو ایم ون کا نام دیا گیا۔ موٹر وے کا یہ حصہ 339 کلو میٹر طویل تھا۔ 26 نومبر 1997ء کو پاکستان کے محکمہ ڈاک نے اس موٹروے کے افتتاح کے موقع پر دس روپے مالیت کا ایک ڈاک ٹکٹ اور پندرہ روپے مالیت کی ایک سووینئیر شیٹ جاری کی جن پر پاکستان موٹروے کا نقشہ بنا تھا اور انگریزی میں  PAKISTAN MOTORWAY GATEWAY TO PROSPERITY اور GOLDEN JUBILEE CELEBERATIONS 1947-1997  کے الفاظ لکھے تھے۔ اس ڈاک ٹکٹ اور سووینئیر شیٹ کا ڈیزائن عادل صلاح الدین نے تیار کیا تھا۔            

UP