> <

منیر حسین کی وفات

منیر حسین ٭27 ستمبر 1995ء کو پاکستان کے نامور گلوکار منیر حسین لاہور میں وفات پاگئے۔ منیر حسین 1930ء کے لگ بھگ پیدا ہوئے تھے۔ موسیقار صفدر حسین نے انہیں فلمی دنیا سے متعارف کروایا جن کی فلم ’’حاتم‘‘ کے لئے انہوں نے اپنا فلمی ’’نغمہ تیرے محلوں کی چھائوں میں قرار اپنالٹا بیٹھے‘‘ گایا تھا۔ ان کے بعد موسیقار رشید عطرے، خواجہ خورشید انور اور اے حمید نے ان کی آواز سے بھرپور فائدہ اٹھا یا۔ رشید عطرے کی موسیقی میں انہوں نے ’’قرار لوٹنے والے قرار کو ترسے(فلم: سات لاکھ)، نثار میں تری گلیوں پہ (فلم:شہید)، دلا ٹھیرجا یاردارنظارا لین دے (فلم :مکھڑا)، متواتر سے مسوری انکھیاں (فلم: موسیقار) اور اس شہر خرابی میں غم عشق کے مارے (فلم: موسیقار) ، خواجہ خورشید انور کی موسیقی میں رم جھم رم جھم پڑے پھوار (فلم:کوئل)، تیری خیر ہوے ڈولی چڑھ جان والیے (فلم:ہیر رانجھا)، ونجھلی والڑیا (فلم: ہیر رانجھا) اور اے حمید کی موسیقی میں زندگی تم سے ملی (فلم: دل کے ٹکڑے)، اے مری زندگی (فلم:توبہ)، جو دل کو توڑتے ہیں (فلم: آشیانہ)، ہم کو دعائیں دو (فلم:عید مبارک)‘‘ منیر حسین کے یادگار نغمات میں شمار ہوتے ہیں۔ منیر حسین لاہور میں مومن پورہ کے قبرستان میں آسودۂ خاک ہیں۔

UP